تحر یک انصاف ہمیشہ ملکی مفادات کو سامنے رکھ کر فیصلے کرتی ہے،حکومت کی کامیاب معاشی پالیسوں کی وجہ سے ملک معاشی میدان میں مضبوط ہورہا ہے ،چوہدری محمدسرور

84

لاہور: گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا ہے کہ تحر یک انصاف ہمیشہ سے ملکی مفادات کو سامنے رکھ کر فیصلے کرتی ہے اور حکومت کی کامیاب معاشی پالیسوں کی وجہ سے معاشی میدان میں نہ صرف پاکستان مضبوط ہورہا ہے بلکہ عالمی معاشی ادارے بھی پاکستان کی اس ترقی کا اعتراف کر ر ہے ہیں ،

جب تک عثمان بزدار کو وزیر اعظم، پارٹی اراکین اور اتحادیوں کی حمایت حاصل ہے وہ وزیر اعلی رہیں گے، کسی کو ہٹانے اور لگانے کا اختیار وزیر اعظم عمران خان کے پاس ہے ،وزیر اعظم کے خلاف تحر یک عدم اعتماد میں اراکین کو پورا کر نا اپوزیشن کی ذمہ داری ہے، ملک میں کسی صورت ہارس ٹر یڈنگ نہیں ہونی چاہیے کیونکہ یہ جمہوریت کے لیے نقصان دہ ہے ،ہم پار لیمنٹ اور جمہوریت کو مضبوط بنانے پر یقین رکھتے ہیں۔

وہ بدھ کو ایکسپو سنٹر لاہور میں نمائش کے افتتاح کے بعد میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے ۔گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ تحر یک انصاف ہمیشہ سے ملکی مفادات کو سامنے رکھ کر فیصلے کرتی ہے اور حکومت کی کامیاب معاشی پالیسوں کی وجہ سے معاشی میدان میں نہ صرف پاکستان مضبوط ہورہا ہے بلکہ عالمی معاشی ادارے بھی پاکستان کی اس ترقی کا اعتراف کر ر ہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ غیر ملکی سر مایہ کاروں کے حوالے سے حکومت کی واضح پالیسی ہے کہ ان کو پاکستان میں سر مایہ کاری کے لیے مکمل سپورٹ فراہم کی جائے گی اور اس بات میں کوئی شک نہیں کہ پاکستان کے ہر شعبے میں غیر ملکی سر مایہ کاری میں اضافہ ہورہا ہے۔چوہدری محمدسرور نے سیاسی سوالوں کے جوابات دیتے ہوئے کہا کہ کسی کے بھی خلاف عدم اعتماد لانا اپوزیشن کا حق ہوتا ہے مگر اپوزیشن کو اس کے لیے ہارس ٹر یڈنگ نہیں کر نی چاہیے، ہار س ٹر یڈ نگ جمہوریت اورپار لیمان کے لئے فائدہ مند نہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم آئین وقانون کی حکمرانی اور جمہوریت پریقین رکھتے ہیں جو بھی کام آئین وقانو ن کے مطابق اور جمہوری طر یقے سے ہوگا اس پر کوئی اعتراض نہیں کر سکتا ،

جہاں تک وزیر اعظم عمران خان کے خلاف اپوزیشن کی تحر یک عدم اعتماد کا تعلق ہے تو اس کے لیے نمبر پورے کر نا اپوزیشن کی ذمہ داری ہے،وہ کیسے 172اراکین کی حمایت حاصل کرتے ہیں، یہ فیصلہ پار لیمنٹ میں ہوگا اور پار لیمنٹ جو بھی فیصلہ کر ے گی وہ سب کو قبول کر نا چاہیے۔

جہانگیر خان تر ین اور عبد العلیم خان کے متعلق سوال کے جواب میں گور نر پنجاب نے کہا کہ پارٹی قیادت کو مشورہ دیا ہے کہ جہانگیر خان تر ین اور عبد العلیم خان سے بات کر یں کیونکہ دونوں کی پار ٹی کے لیے خدمات ہیں ،پارٹی کو متحد رکھنا پارٹی قیادت کی ذمہ داری ہے،

یہ پارٹی بھی ایک خاندان ہے اگر اس میں اختلافات ہوں گے تو یہ پارٹی کے لیے نقصان دہ ہوگا ،ہم نے پارٹی کونقصان سے بچانا اور مضبوط بنانا ہے۔چوہدری محمدسرور نے وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کے متعلق سوال کے جواب میں کہا کہ جب تک عثمان بزدار کو وزیر اعظم عمران خان ،پارٹی اراکین اسمبلی اور اتحادیوں کی حمایت حاصل ہے وہ وزیر اعلی پنجاب رہیں گے ،کسی کو بھی وزیر اعلی لگانا اور ہٹانے کا اختیار وزیر اعظم کے پاس ہے

Comments are closed.

Subscribe to Newsletter
close-link